جاوید ہاشمی کے چشم کشا انکشافات: محمد تحسین

0
  • 45
    Shares

میں نے چشم تخیل سے دیکھا کہ جاوید ہاشمی صاحب موجودہ صورت حال کو کس نظر سے دیکھ رہے ہونگے تو معاملہ کچھ اسطرح کا سامنے آیا۔عمران خان نے مجھ سے کہا تھا کہ ہم دنیا کہ مہنگے ترین علاقے میں محلات خرید کر نواز شریف کے نام لگوا دیں گے۔ پھر مریم نواز سے بیان دلوائیں گے کہ میری اور میرے خاندان کی بیرون ملک کوئی جائیداد نہیں پھر انٹرنیشنل صحافیوں سے مل کر پانامہ لیکس کروائیں گے جن میں شریف فیملی کی بیرون ملک جائیدادیں سامنے آجائیں گی۔ پھر حسین نواز سے انٹرویو کروائیں گے کہ الحمداللہ یہ جائیدادیں ہماری ہیں۔ پھر نواز شریف سے پارلیمنٹ اور قوم سے خطاب کروائیں گے کہ ان سب جائیدادوں سے متعلق ایک ایک ثبوت ایک ایک کاغذ ہمارے پاس موجود ہے۔ پھر ہم سڑکوں پر جدوجہد کریں گے اور پلان کے مطابق پاکستان کا کوئی بھی ادارہ پانامہ لیکس کا نوٹس نہیں لے گا بالآخر کیس سپریم کورٹ میں جائے گا۔ اس دوران ہم ان تمام کاغذات اور ثبوتوں کو ضائع کردیں گے جن کا ذکر نواز شریف نے قومی اسمبلی اور قوم سے خطاب کے دوران کیا تھا۔ نتیجتا نواز شریف کو قطری شہزادے کا خط دینا پڑے گا۔ لیکن قطری شہزادے سے میں پہلے ہی بات کرچکا ہوں۔ وہ خط تو دے دے گا لیکن وہ پاکستان آنے سے انکار کردے گا۔ اسے ویڈیو لنک کا آپشن دیا جائے گا اس پر بھی نہیں مانے گا۔ دوحہ میں پاکستانی سفارتخانے آنے کا کہا جائے گا تو اس پر بھی نہیں مانے گا۔ پھر سپریم کورٹ کے لارجر بینچ میں سے دو جج نواز شریف کو نااہل قرار دے دیں گے۔ تین کہیں گے کہ مزید تحقیقات ہوں اور ملزمان کو بھی مزید موقع دیا جائے کہ وہ اپنی صفائی اور ثبوت دے سکیں۔ پھر جے آئی ٹی بنوائی جائے گی۔ اس میں آئی ایس آئی کا ایک بندہ بھی شامل ہوگا جو اس سے پہلے ڈان لیکس جے آئی ٹی میں بھی شامل تھا اور حکومت کو کلین چٹ دی تھی۔ لیکن اب میں نے اسے خرید لیا ہے اس بار وہ ہمارے حق میں کھیلے گا۔ اندر خانے میں نے ایس ای سی پی کے چیرمین سے بھی بات کرلی ہے کہ وہ شریف خاندان کے ریکارڈ میں ٹیمپرنگ شروع کردے تاکہ ہمارا کیس مضبوط ہو اور کسی سازش کا تاثر نہ ملے۔ ایسے ہی معاملات ایف بی آر سے بھی طے ہوگئے ہیں۔ جے آئی ٹی تحقیقات میں نواز شریف کی مزید جعلی کمپنیاں اور جعلی اقامہ بھی نکال لائے گی۔ سعودی عرب، یو اے ای اور برطانیہ کے اداروں اور حکومتوں کو خرید لیا گیا ہے وہ نواز شریف کے خلاف جعلی کاغذات جے آئی ٹی کو بنا کردیں گے۔ مریم نواز کی جانب سے جمع کروائی گئی ٹرسٹ ڈیڈ میں استعمال شدہ ٹائمز نیو رومن فونٹ کو کلیبری سے بدلوا دیا جاے گا تاکہ مریم نواز کو جھوٹا ثابت کیا جاسکے۔ بل گیٹس سے میری ملاقات طے ہے جس میں بل گیٹس کو رشوت دے کر کیلبری فونٹ کی ریلیز ڈیٹ بدلوادی جائے گی۔ شریف فیملی کے سارے وکلاءکو دھمکا کر میں نے اپنے ساتھ شامل کرلوں گا۔ ہر وکیل اپنے دلائل کے دوران کہے گا کہ ثبوت اگلا وکیل دے گا۔ یوں سپریم کورٹ کے لارجر بینچ کو موقع مل جائے گا کہ وہ پانچ صفر سے نواز شریف کے خلاف فیصلہ دے۔ نواز شریف نے کوئی کرپشن نہیں کی لیکن سپریم کورٹ کا لارجر بینچ شریف فیملی کے خلاف مذاق میں چھ ریفرنس نیب میں بھیج دے گا۔

پھر ہاشمی صاحب فرمایں گے یہ ساری باتیں سن کر میرے قدموں تلے زمین نکل گیی اور میں نے خان صاحب سے کہا کہ میں جمہوریت اور پاکستان کے خلاف یہ سازش کبھی کامیاب نہیں ہونے دوں گا۔ آپ برطانیہ، یو اے ای، سعودی عرب کی حکومتوں اور اداروں، بل گیٹس مائیکروسوفٹ کو تو خرید سکتے ہیں لیکن مجھے نہیں۔ پاکستان کی فوج سپریم کورٹ اور باقی ادارے تو آپ کے ساتھ مل کر سازش کرسکتے ہیں لیکن میں نہیں۔ میں تو اس وقت بھی جمہوریت کی بات کرتا تھا جب ضیاء الحق کی کابینہ میں شامل تھا۔ خان صاحب کو کھری کھری سنا کر میں ملتان آگیا اور اب آپ ساری قوم کو اس سازش سے آگاہ کررہا ہوں۔ خان صاحب نواز شریف اور جمہوریت کے خلاف سازش میں کامیاب ہوچکے ہیں۔ ویسے میں خان صاحب کو بہت پسند کرتا ہوں وہ سچے اور کھرے انسان ہیں پاکستان سے محبت رکھتے ہیں لیکن میری یہ وصیت ہے کہ مجھے نون لیگ کے پرچم میں لپیٹ کر دفن کیا جائے۔

جاوید ہاشمی کے یہ چشم کشاء انکشافات سن کر میرے خیالات کی رو ٹوٹ گیی اور قلم میرے ہاتھ سے چھوٹ کر نیچے جاگرا۔

Leave a Reply

Leave A Reply

%d bloggers like this: