مشال خان کے قتل پہ چند اشعار ۔۔۔۔۔۔ احمد حماد

0

مردان سانحے، یعنی ہجوم کے ہاتھوں مشال خان کے قتل پہ چند اشعار
۔

بھِیڑ کے ہاتھ عدالت نہیں دی جا سکتی
جہل کے ہاتھ امامت نہیں دی جا سکتی

مذہبِ امن میں رائے کو دبانے کے لیے
قتل کرنے کی اجازت نہیں دی جا سکتی

آگ اور خون سے تاریخ لکھی ہو جس نے
اس کو دنیا کی قیادت نہیں دی جا سکتی

میں رواداری کی تہذیب کا پالا ہوا ہوں
مجھے وحشت کی ثقافت نہیں دی جا سکتی

راکھ میں ڈھال دیا آتشِ غم نے حمّاد
اب ہمیں اور تمازت نہیں دی جا سکتی

احمد حمّاد

About Author

Leave a Reply

Leave A Reply

%d bloggers like this: