جماعت اسلامی کو الحاج ابرار تنولی مبارک: عامر ہزاروی

0
  • 113
    Shares

عامر ہزاروی

اسلامی نظام کی رکی ہوئی منزل اب الحاج ابرار تنولی کی وجہ سے مزید قریب ہو گئی، جماعت اسلامی کو یہ تبدیلی مبارک۔

تازہ ترین خبر یہ ہے کہ مانسہرہ کی مشہور شخصیت الحاج ابرار تنولی جماعت اسلامی میں شامل ہو چکے ہیں، انہیں خوش آمدید کہنے کے لیے جماعت اسلامی کے ذمہ داران خود مانسہرہ تشریف لائے۔

حاجی ابرار کا میں ماضی تو نہیں لکھتا کہ ماضی میں وہ کیسے تھے ان پر کتنے کیس تھے یا جرائم کی فہرست کیا ہے؟ وہ الزامات تھے یا حقیقت، کسی کو ماضی کا طعنہ دینا اچھا نہیں، البتہ اتنا بتانا ضروری سمجھتا ہوں کہ اس وقت موصوف قومی وطن پارٹی کے وزیر برائے جنگلات ہیں، عمران خان نے انکی وجہ سے قومی وطن پارٹی سے اتحاد توڑا اور ان پر کرپشن کے الزامات لگائے۔

وزارت سے ہٹائے جانے کے بعد حاجی ابرار نے عمران خان کے خلاف عدالت جانے کا اعلان کیا، تاہم وہ اعلان اعلان ہی ثابت ہوا، نا عمران خان نے کچھ کیا اور نہ ہی الحاج ابرار تنولی نے کوئی قدم اٹھایا، بغیر حلالہ کے نکاح ہوا، قومی وطن پارٹی اور پی ٹی آئی میں دوبارہ اتحاد ہو گیا، معلوم نہیں انہیں قومی وطن پارٹی سے کیا شکایت ہے اور وہ کیوں جماعت اسلامی میں شامل ہوئے؟ خیر وہ جماعت اسلامی میں تشریف لا چکے ہیں، شامل ہونے کی وجہ سراج الحق کی سادگی بتائی گئی، جی ہاں سراج الحق کی سادگی۔

انکی آمد پر جماعت کے کئی مقررین نے خطابات کیے وہیں ایک صاحب نے خطاب کرتے ہوئے جوش خطابت میں فرمایا جس طرح حضرت عمر کے آنے سے اسلام مضبوط ہوا اس طرح حاجی ابرار کے آنے سے اسلامی نظام کی منزل قریب آ گئی ہے، ویسے اس بیان پر سبحان اللہ تو بنتی ہے نا باس؟

کل تک جن لوگوں کو کرپٹ کہا جاتا تھا اب وہ دودھ کے دھلے ہوگئے، حاجی ابرار نے پی ٹی آئی میں شمولیت کے لیے کافی دوڑ دھوپ کی وہاں کوئی رسپانس نہیں ملا تو جماعت اسلامی کی طرف چلے گئے، اس سے پہلے موصوف کے مدمقابل جمعیت علمائے اسلام میں شامل ہوئے اور انہوں نے ان کا راستہ بند کرنے کے لیے جماعت اسلامی میں چھلانگ لگا دی، سوال یہ ہے کیا حاجی صاحب ایم ایم اے کا ٹکٹ لے سکیں گے؟ خیر یہ تو وقت بتائے گا۔

البتہ دو باتیں قابل غور ہیں۔
ایک جسے کوئی قبول نا کرے جماعت اسے قبول کرنے کو تیار ہے دوم اب معیار صالحیت نہیں ’’صلاحیت‘‘ بن چکا ہے _

Leave a Reply

Leave A Reply

%d bloggers like this: